ترکی میں 60 معذور خواتین صحافی بن گئیں

انقرہ: ترکی میں جسمانی معذوری کی شکار 60 خواتین نے صحافت کو بطور کیریئر اختیار کرتے ہوئے پیشہ وارانہ ذمہ داریاں ادا کرنا شروع کردیں۔ترک خبررساں ادارے کے مطابق 60 معذور خواتین پر مشتمل ایک گروپ نے نئے مواصلاتی نیٹ ورک سے وابستہ ہوکر بطور رپورٹر مختلف شعبہ جات کی رپورٹنگ کررہی ہیں۔یہ پلیٹ فارم رواں سال کے وسط میں بنایا گیا تھا اور اب تک مذکورہ صحافیوں کی 80سے زائد خبریں اور آرٹیکلز شائع ہوچکے ہیں۔منصوبے کی تعلیمی کنسلٹنٹ سیلن ڈوگن  نے بتایا کہ  یہ اپنی نوعیت کا  منفرد اقدام ہے  جس کا مقصد معذوروں کے لیے  میڈیا کی طاقت کو بڑھانا ہے۔ڈوگن کے مطابق ان معذور خواتین کا میڈیا میں آنے سے قبل کوئی صحافتی تجربہ نہیں تھا تاہم انہیں تربیت دے کر اس شعبے میں اپنے لوہا منوانے کا ایک موقع دیا گیا ہے اور ان کی شائع شدہ خبریں خصوصی اہمیت رکھتی ہیں۔سیلن ڈوگن  کہتی ہیں کہ ان کےنیٹ ورک سے وابستہ خواتین انقرہ، استنبول، غازی انتب سمیت دیگر شہروں سے تعلق رکھتی ہیں اور یہ مختلف اقسام کی معذوری کا شکار ہیں، یہ خواتین نہ صرف خبروں کی کھوج میں لگی رہتی ہیں بلکہ انٹرویز کے ساتھ ساتھ خبریں بنانا اورآرٹیکلز لکھنے کی ذمہ داریاں بھی ادا کررہی ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Powered by Dragonballsuper Youtube Download animeshow

Online Shopping in BangladeshCheap Hotels in Bangladesh